پاکستان نے مقامی کروز میزائل کے اپ گریڈ ورژن کا کامیاب تجربہ کیا: آئی ایس پی آر – پاکستان

پاکستان نے مقامی طور پر تیار کردہ بابر کروز میزائل 1B کے جدید رینج ورژن کا کامیاب تجربہ کیا ہے۔

کے مطابق ایسوسی ایٹڈ پریسکروز میزائل کی رینج 900 کلومیٹر سے زیادہ ہے جو کہ اسی ماڈل کے پچھلے میزائل کی رینج سے دوگنا ہے۔

انٹر سروسز پبلک ریلیشنز (آئی ایس پی آر) نے ایک بیان میں کہا کہ آج کے لانچ کو ڈائریکٹر جنرل اسٹریٹجک پلانز ڈویژن لیفٹیننٹ جنرل ندیم ذکی منج، نیشنل انجینئرنگ اینڈ سائنٹیفک کمیشن کے چیئرمین ڈاکٹر رضا ثمر اور کمانڈر آرمی اسٹریٹجک فورس کمانڈ لیفٹیننٹ جنرل محمد علی نے تعاون کیا۔ دیکھا ,

سٹریٹیجک پلاننگ ڈویژن کے سینئر افسران، سٹریٹجک فورسز، سٹریٹجک آرگنائزیشنز کے سائنسی اور انجینئرز بھی موجود تھے۔

آئی ایس پی آر کے بیان میں کہا گیا ہے کہ اسٹریٹجک پلاننگ ڈویژن کے ڈائریکٹر جنرل نے کروز میزائل ٹیکنالوجی میں کمال حاصل کرنے پر سائنسدانوں اور انجینئرز کو مبارکباد دی اور اس اعتماد کا اظہار کیا کہ یہ تجربہ پاکستان کی اسٹریٹجک ڈیٹرنس کو مزید مضبوط کرے گا۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ صدر ڈاکٹر عارف علوی، وزیراعظم عمران خان، چیئرمین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کمیٹی جنرل ندیم رضا اور سروسز چیفس نے بھی سائنسدانوں اور انجینئرز کو کامیاب لانچنگ پر مبارکباد دی۔

فروری میں، فوج نے میزائل کے پرانے ورژن کا کامیاب تجربہ کیا تھا، جو 450 کلومیٹر دور تک زمینی اور سمندری اہداف کو نشانہ بنانے کی صلاحیت رکھتا تھا۔

آئی ایس پی آر کے بیان میں کہا گیا ہے کہ بابر کروز میزائل 1 اے کو ایک “اسٹیٹ آف دی آرٹ ملٹی ٹیوب میزائل لانچ وہیکل” سے لانچ کیا گیا۔