لاہور ہائیکورٹ کے چیف جسٹس نے سیالکوٹ لنچنگ کیس میں چالان پیش کرنے کا حکم دے دیا – Pakistan

نارووال: لاہور ہائی کورٹ کے چیف جسٹس محمد امیر بھٹی نے سیالکوٹ کے ڈسٹرکٹ پولیس آفیسر عمر سعید ملک کو سری لنکن شہری پریانتھا کمارا کے قتل میں ملوث ملزمان کے چالان جلد از جلد عدالت میں جمع کرانے کی ہدایت کی ہے۔

یہ ہدایات انہوں نے منگل کو ڈسٹرکٹ جوڈیشل کمپلیکس کے دورے کے دوران دیں۔

چیف جسٹس کے ہمراہ جسٹس شجاعت علی خان، جسٹس ساجد محمود سیٹھی، جسٹس مسعود عابد نقوی، جسٹس انوار الحق پنوں اور لاہور ہائیکورٹ کے رجسٹرار عرفان احمد سعید بھی تھے۔

ڈی پی او ملک نے چیف جسٹس کو سری لنکن نیشنل لنچنگ کیس میں اب تک ہونے والی پیش رفت سے آگاہ کیا۔

چیف جسٹس نے ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ کے کمیٹی روم میں جوڈیشل افسران سے خطاب بھی کیا۔ انہوں نے سیالکوٹ میں جوڈیشل کمپلیکس کے توسیعی منصوبے کا سنگ بنیاد رکھا۔ 18 کنال اراضی پر 8 اضافی سول اور فیملی کورٹس کی تعمیر پر 100 ملین روپے خرچ ہوں گے۔ ڈی سی فاروق اور ایکسن بلڈنگ ظہیرالدین بابر نے چیف جسٹس کو منصوبے کے بارے میں بریفنگ دی۔

بعد ازاں چیف جسٹس نے تحصیل پسرور میں 127 کنال اراضی پر 350 کروڑ روپے کی لاگت سے تعمیر ہونے والے جوڈیشل کمپلیکس کا سنگ بنیاد رکھا۔

ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج جزیلہ اسلم نے چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ کو سووینئر پیش کیا۔

ڈان، دسمبر 29، 2021 میں شائع ہوا۔