کوئٹہ کے جناح روڈ پر دھماکے میں کم از کم 3 افراد جاں بحق، 13 زخمی

کوئٹہ میں جناح روڈ پر سائنس کالج کے قریب جمعرات کی شب دھماکے میں کم از کم تین افراد جاں بحق اور 13 زخمی ہوگئے، کوئٹہ سول اسپتال کے میڈیکل سپرنٹنڈنٹ ڈاکٹر جاوید اختر۔

انہوں نے کہا کہ زخمیوں کو فوری اور مناسب علاج فراہم کرنے کے انتظامات کئے جا رہے ہیں۔

ابھی تک دھماکے کی نوعیت معلوم نہیں ہو سکی ہے۔

واقعے کے فوراً بعد بلوچستان کے وزیراعلیٰ میر عبدالقدوس بزنجو نے واقعے کی مذمت کرتے ہوئے اسے ’دہشت گردی کی کارروائی‘ قرار دیا۔

بزنزو نے ایک بیان میں کہا کہ انہیں “دہشت گردی کی کارروائی” میں جانوں کے ضیاع پر دکھ ہوا ہے اور معصوم شہریوں کو نشانہ بنانے والوں کو سخت سزا دی جانی چاہیے۔

انہوں نے کوئٹہ میں سیکیورٹی انتظامات پر عدم اطمینان کا اظہار کیا۔

وزیراعلیٰ نے انسپکٹر جنرل پولیس بلوچستان سے واقعہ اور شہر میں سکیورٹی انتظامات کی رپورٹ بھی طلب کی۔

انہوں نے کہا کہ “عوام کے جان و مال کی حفاظت کرنا پولیس اور سیکورٹی اداروں کی ذمہ داری ہے۔ شہریوں کو دہشت گردوں کے رحم و کرم پر نہیں چھوڑا جا سکتا”۔


یہ ایک ترقی پذیر کہانی ہے جسے حالات کے بدلتے ہی اپ ڈیٹ کیا جا رہا ہے۔ میڈیا میں آنے والی ابتدائی رپورٹیں بعض اوقات غلط بھی ہو سکتی ہیں۔ ہم قابل اعتماد ذرائع جیسے کہ متعلقہ، اہل اہلکاروں اور اپنے اسٹاف رپورٹرز پر بھروسہ کرتے ہوئے بروقت اور درستگی کو یقینی بنانے کی کوشش کریں گے۔