جماعت الدعوۃ کے سربراہ کے گھر پر دھماکے میں چار افراد ہلاک – پاکستان

لاہور: انسداد دہشت گردی کی عدالت نے بدھ کے روز جوہر ٹاؤن میں جماعت الدعوۃ کے سربراہ حافظ سعید کی رہائش گاہ کے قریب گزشتہ سال ہونے والے دھماکے میں ملوث چار ملزمان کو نو مقدمات میں سزائے موت سنادی۔

سزا پانے والوں میں پیٹر پال، عید گل، ضیاء اللہ اور سجاد حسین شامل ہیں۔

ٹرائل جج نے ایک اور ملزم عائشہ گل کو بھی مرکزی ملزمان کی سہولت کاری پر پانچ سال قید کی سزا سنائی۔

جج ارشد حسین بھٹہ نے سیکیورٹی وجوہات کی بنا پر ملزمان کی جیل میں سماعت کی۔

محکمہ انسداد دہشت گردی (سی ٹی ڈی) نے ملزمان کو گرفتار کیا تھا اور مقدمے کی سماعت کے دوران استغاثہ نے 56 گواہ پیش کیے تھے۔

ملزمان نے الزامات اور واقعے میں اپنے کردار سے انکار کیا تھا۔ ان کا کہنا تھا کہ سی ٹی ڈی نے ان سے صرف اپنی کارکردگی دکھانے کے لیے چارج کیا۔

23 جون 2021 کو جوہر ٹاؤن میں حافظ سعید کی رہائش گاہ کے قریب زور دار دھماکے میں 3 افراد جاں بحق اور ایک پولیس کانسٹیبل سمیت 24 افراد زخمی ہوئے۔

ڈان، جنوری 13، 2022 میں شائع ہوا۔